سوات مین قانون کا جنازہ نکال دیاگیا۔تحریر:احسان خان جنرل سیکرٹری پاکستان فارماسسٹ ایسو سی ایشن خیبر پختونخوا

سوات مین قانون کا جنازہ نکال دیاگیا۔تحریر:احسان خان جنرل سیکرٹری پاکستان فارماسسٹ ایسو سی ایشن خیبر پختونخوا

گزشتہ روز ڈرگ انسپکٹر سوات غیر معیاری اور انڈین میڈیسن کے خلاف کریک ڈاون کے دوران سوات کے ھیڈ کوارٹر سیدو شریف کے معروف اور مشہور میڈیکل سنٹر شفا میڈیکل سنٹر کے مین فارمیسی شفاء فارمیسی کا انسپکش کرتے ہوے قانونی کاروائی کی۔
فارمیسی کا لائسنس ختم المیعاد 7/4/2016 ہونے کے ساتھ ساتھ ادویات کے خریدوفروخت میں مصروف تھا۔ڈرگ انسپکٹر نے ڈرگ ایکٹ 1976 کے تحت کاروائی کرتے ہوے premises کو سیل کر دیا کیونکہ بغیر لائسنس کے ادویات بیچنا جرم ہے۔
کچھ دیر بعد غیر قانونی ادویات کے ٹھکیدار اکٹھے ہوکر حکومت اور متعلقہ ڈرگ انسپکٹر کے خلاف مظاہرہ شروع کرکے مطالبہ کیا کہ ہمیں زھر بیچنے کی اجازت دی جاے۔انکی سرپرستی کرتے ہوے ایک تاجر رہنما اشتعال میں آکر SHOتھانہ سیدو شریف کی موجودگی میں ڈرگ انسپکٹر کو گالی گلوچ دیکر سیل شدہ دکان کا سیل ختم کرکے قانون کا جنازہ نکال کر ایک بار پھر سوات میں تحریک طالبان سوات کا دور تازہ کر دیا۔
کہاں ہے ضلعی ایڈمنسٹریشن؟
کہاں ہے قانون نافذ کرنے والے ادارے؟
ہم یہ مطالبہ کرتے ہیں کہ متعلقہ تاجر رہنما کو قانون ہاتھ لینے پر سخت سزا دی جائے اور غیر قانونی و جعلی ادویات کا کاروبار کرنے کے خلاف بھی سخت ایکشن لیا جائے.

پاکستان فارماسسٹ ایسو سی ایشن خیبر پختونخوا

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں